تازہ ترین  

اسے دیکھوں تو روشن ہوں نگاہیں ۔۔۔ وہ جیسے چاند کا ٹکڑا ہوا ہے
    |     4 weeks ago     |    شعر و شاعری
وہ مجھ سے اب تلک بچھڑا ہوا ہے
تسلسل سانس کا ٹھہرا ہوا ہے

اسے دیکھوں تو روشن ہوں نگاہیں
وہ جیسے چاند کا ٹکڑا ہوا ہے

ملوں خوابوں میں بھی اس سے بھلا کیوں؟
وہ مجھ سے بے وجہ روٹھا ہوا ہے

یہ موسیقی کہیں اندر بجی ہے
خوشی کے گیت کا مکھڑا ہوا ہے

ابھی تک بے وفائی کا تمہاری
جگر پر زخم سا رکھا ہوا ہے

عجب سی شہر میں اک یاسیت ہے
ستارہ چرخ پر ٹوٹا ہوا ہے

کھنکتی بیڑیاں بتلا رہی ہیں
کہ زنداں میں کوئی جکڑا ہوا ہے

ترے الفاظ تشنہ کہہ رہے ہیں
کہ تیرا دل بہت اجڑا ہوا ہے





Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


اہم خبریں

تازہ ترین کالم / مضامین


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved