تازہ ترین  

کسی کے روگ میں بھیگی عبادت بھاڑ میں جائے
    |     1 week ago     |    شعر و شاعری
کسی کے روگ میں بھیگی عبادت بھاڑ میں جائے
ضرورت کی عبادت ہو؛ ضرورت بھاڑ میں جائے

میری تجویز تھی چندا مگر تُو مانتا کب ہے
تو یہ لے روشنی اپنی یہ طاقت بھاڑ میں جائے

محبت یہ نہیں ہوتی کہ عزت پیش کر دیجے
لٹی ہوں عصمتیں جس میں محبت بھاڑ میں جائے

گلے جو کاٹ کر اپنے گھروں کو روشنی بخشیں
تو ایسی سنگدل ظالم قیادت بھاڑ میں جائے

جہاں گھربار لٹتے ہوں محبت بین کرتی ہو
تو ایسے شہر گلیاں گھر ریاست بھاڑ میں جائے

گریباں چاک کر کے دربدرپھرنے سے کیاحاصل
محبت گر یہی (ہے تو محبت بھاڑ میں جاۓ)

رقیبوں کی طرح جو گھورتا رہتا ہے محفل میں
اب ایسے شخص سے تنہا رفاقت بھاڑ میں جائے

کسی نے بھی جو اس کی آنکھ سے قطرہ گرا دیکھا؟
مجھے سہنا ہے سہہ لُوں گا اذیت بھاڑ میں جائے






Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


اہم خبریں

تازہ ترین کالم / مضامین


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved