تازہ ترین  

جمعیت علماء اسلام (س) پنجاب کے امیر مولانا عبدالقدوس نقشبندی کی ڈسکہ میں پریس کانفرنس
    |     2 weeks ago     |    اہم خبریں
ڈسکہ(وائس آف ڈسکہ رپورٹ) جمعیت علماء اسلام (س) پنجاب کے امیر مولانا عبدالقدوس نقشبندی اور جنرل سیکرٹری جمعیت علماء اسلام (س) پنجاب صاحبزادمولانا محمد ایوب خاں نے کہا کہ پاکستان میں دو چھاؤنیاں ملکی حفاظت کیلئے کام کررہی ہیں ایک عسکری قیادت میں مسلح افواج کی خدمات قابل تحسین ہیں اوردوسری مدارس نظریاتی اعتبار سے کام کررہے ہیں جب تک یہ دونوں پاکستان کی سا لمیت اور استحکام کیلئے اکٹھے نہیں ہوں گے تب تک پاکستان ترقی نہیں کریگا، مدارس کی ترقی اور استحکام ہوگا تو یہ پاکستان کے بہتر سپاہی ہیں مدارس کی خودمختاری پر آنچ نہیں آنے دینگے یہ پاکستان کی نظریاتی چھاؤنیاں ہیں اس کی حفاظت ماضی میں بھی علماء اکرام نے کی تھی اور اب بھی کرینگے ہمارے ایمان کا حصہ ہے کہ ہر طرح کی قربانیاں دیکر مدارس کو قائم ودائم رکھیں گے ان خیالات کااظہار انہوں نے تحفظ مدارس دینیہ واستحکام پاکستان مکالمہ کے زیر اہتمام سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیاانہوں نے کہا کہ حکمران کمزور ہوتے ہیں چند پیسوں کی خاطر آئی ایم ایف اور عالمی مالیت اداروں کے آگے انکی شرائط مان لیتے ہیں اور اُنکے آگے جھک جاتے ہیں حکومت کی جب بھی کسی سے ڈیل ہوتی ہے کہ تو مدارس پر بوجھ ڈال دیا جاتا ہے حکمران پاکستان کو ترقی اور مضبوط بنانا چاہتے ہیں تو یکجہتی اوراعتماد کی فضا قائم کریں علماء اکرام حکومت کا ہر اچھے کام میں ساتھ دیگی حکمران اگر پاکستان،اسلام اور مدارس کیخلاف ہوئی تو ہم بلائے طاق رکھتے ہوئے اس کی مخالفت کرینگے اس وقت مدارس کی رجسٹریشن نہیں ہورہی ہے حکومت اسمیں آسانیاں پیدا کرے،مدارس میں بلاجواز پر چھاپے مارہے جارہے ہیں، اس وقت بلوچستان،سندھ،جنوبی پنجاب،فاٹہ کے مسائل،افغانستان کے اندر بدامنی،کشمیر میں جو مسائل ہیں اس میں پاکستان کو اپنا بھر پور کردار ادا کرنا ہوگا انگریز جب ہند وپاک میں آیا تو اُس نے تجارت کا نعرہ لگا کر آیا تھا تو اُس وقت بھی انگریز کیخلاف بھی علماء اکرام ہی سامنے آئے تھے،پاکستان حاصل کرنے کیلئے ہمیں بہت ساری شہادتیں دینی پڑی تھیں اُس میں علماء اکرام کو بہت بڑا کردار ہے پھر جا کر پاکستان کلمہ کے نام پر حاصل کیا گیا تھا پاکستان کے استحکام اور تحفظ کیلئے یہی علماء اکرام سب سے آگے ہوں گے،حکومت نے جو احتساب کا عمل شروع کیا ہے وہ ایک اچھا عمل ہے اس میں حکومت کا بھر پور ساتھ دیتے ہیں اور یہ بھی کہتے ہیں کہ احتساب کا عمل بھر پور جوش کیساتھ ہونا چاہیے اور احتساب بھی سب کا ہونا چاہیے،اس موقع پر حافظ محمد طیب خاں،مولانا ارشد محمود ودیگر بھی ہمراہ تھے  





Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


اہم خبریں

تازہ ترین کالم / مضامین


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved