تازہ ترین  

کوئی فریاد کر کے دیکھتے ہیں ۔۔۔ پھر اُسے یاد کر کے دیکھتے ہیں
    |     4 months ago     |    شعر و شاعری
کوئی فریاد کر کے دیکھتے ہیں
پھر اُسے یاد کر کے دیکھتے ہیں

وصل کی جستجو نہ راس آئی
ہجر آباد کر کے دیکھتے ہیں

روپ جھوٹے ہیں سب حقیقت کے
خواب ایجاد کر کے دیکھتے ہیں

کوئی آباد ہو ہی جائے گا
خود کو برباد کر کے دیکھتے ہیں

دم گُھٹا جا رہا ہے سینے میں
سانس آزاد کر کے دیکھتے ہیں

جانتے بوجھتے ہوئے شیریں
وقت برباد کر کے دیکھتے ہیں






Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


اہم خبریں

تازہ ترین کالم / مضامین


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved