تازہ ترین  

ہومیوپیتھی بہترین طریقہ علاج ہے ہومیوڈاکٹر اشرف محمود
    |     1 month ago     |    اہم خبریں
ڈسکہ (محمدامین رضا مغل)ماہر ہومیو فزیشن ڈاکٹر اشرف محمود نے ہومیو پیتھی کے عالمی دن پر منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس وقت پاکستان سمیت دنیا بھر میں بڑی تعداد میں لوگ ہومیو پیتھک طریقہ علاج کی طرف رجوع کررہے ہیں پوری دنیا میں اس وقت ہومیوپیتھی ایلوپیتھی کے مقابلے میں زیادہ پسند کی جا رہی ہے۔ اور سالانہ لاکھوں لوگ ہومیوپیتھی کے گرویدہ ہو رہے ہیں۔ اور گورنمنٹ ہسپتالوں میں ایلوپیتھی کی طرح اس کی سیٹیں مقرر ہیں۔ مگر بد قسمتی سے وطن عزیز میں اب بھی ہومیوپیتھی کے خلاف بہت بڑا پروپیگنڈا کیا جاتا ہے۔ جس کی وجہ گورنمنٹ کے اداروں میں ہومیوپیتھی کو اہمیت نہ دینا اور ہسپتالوں میں ہومیوپیتھک ڈاکٹرز لوگوں کی خدمت کے لئے موقع نہ دینا۔ اس وجہ سے لوگ سرکاری اداروں میں انہی لوگوں سے علاج کروانا چاہتے ہیں۔ جو وہاں موجود ہیں۔ مگر اس کے باوجود پچھلے دس سال میں ہومیوپیتھی نے اپنی مدد آپ کے تحت عوام میں بہت مقبولیت حاصل کر لی ہے۔ اس کی ایک وجہ ہومیوپیتھک ڈاکٹرز کی قابلیت جس میں اکثر اوقات وہ کینسرز کااور اُن بیماریوں کا جن کو ایلوپیتھی لا علاج قرار دیتی ہے، کا مکمل علاج کر لیتے ہیں۔ اور لوگ کئی سال تک صحت مند زندگی گزارتے ہیں۔ جس کی وجہ سے دوسرے لوگ بھی ہومیوپیتھی سے علاج کروانا پسند کر رہے ہیں۔ انشائاللہ امید ہے کہ آئندہ آنے والے برسوں میں ہومیوپیتھی عوام میں مقبولیت کے ریکارڈ توڑ دے گی۔انہوں نے کہا کہ عام طور پر لوگ ہومیو پیتھی کو میٹھی گولیوں کا طریقہ علاج بھی کہتے ہیں تو یہ بھی درست ہے کہ ہومیو پیتھی کو لوگوں میں مقبول کرنے اور دوا کھانے میں آسانی پیدا کرنے کی غرض سے گولیوں کو کلوکوز ملا کر میٹھا کیا جاتا ہے جن پر دوائی کے قطرے ڈالے جاتے ہیں تاکہ ہر عمر کے افراد با آسانی دوائی استعمال کر لیںیہی وجہ ہے کہ بچے بھی ہومیو پیتھی ادویات شوق سے استعمال کر لیتے ہیں۔جہاں تک بات ہے سست علاج کی تو یہ بات بالکل غلط اور بے تکی ہے۔ ہومیو پیتھی ادویات کی سلیکشن اگر درست ہو اور دوا کی پوٹینسی بھی ٹھیک ہو تو یہ ایلوپیتھی سے کئی گنا زود اثر ہے، ادھر زبان پر قطرہ ڈالا اور ادھر تکلیف ختم۔ہومیو پیتھی کے خلاف پراپیگنڈہ بڑے منظم انداز میں کیا جاتا ہے۔ بلڈ پریشر، شوگر یا کینسر کے شکار مریض کئی کئی ماہ بلکہ کئی کئی سال سے علاج کرا رہے ہوتے ہیں مگر جب ہومیو پیتھی کی طرف آتے ہیں تو انہیں کہا جاتا ہے کہ دو تین سال علاج کروا لیں تو انکا مرض ہمیشہ ہمیشہ کیلئے ٹھیک ہو جائے گا تو اسے طویل عرصہ تصور کر لیا جاتا ہے حالانکہ وہ پہلے ہی کئی سال سے ادویات استعمال کر رہے ہیں مگر صحتیاب ہونے کیلئے انہیں ہمارا بتایا گیا دورانیہ طویل دکھائی دینے لگتا ہے لہذا آپ اس معاملے کا فیصلہ اب خود کر لیں 





Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


اہم خبریں

تازہ ترین کالم / مضامین


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved